خبرگزاری شبستان

دوشنبه ۲ اسفند ۱۳۹۵

الاثنين ٢٤ جمادى الأولى ١٤٣٨

Monday, February 20, 2017

وقت :   Thursday, January 05, 2017 خبر کوڈ : 66316
محسن رضائی:
دشمن کے ساتھ ہماری جنگ ایک ثقافتی جنگ ہے
خبررساں ایجنسی شبستان: تشخیص مصلحت نظام کونسل کےسیکرٹری نےکہا ہےکہ دشمن یہ خیال کرتے ہیں کہ ہم مقام ومنصب کے پیچھے ہیں جبکہ ہم اقدارکے درپے ہیں اورشہادت اورقربانی ہمارے لیے سب سے اونچا مقام ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان شعبہ کرمانشاہ کی رپورٹ کےمطابق تشخیص مصلحت نظام اسمبلی کےسیکرٹری سردارمحسن رضائی نے ۵جنوری کو کرمانشاہ شہرکے ثاراللہ امام بارگاہ میں شہداء کی یاد میں منعقد ہونے والے پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ صوبہ کرمانشاہ کے لوگوں نے پوری تاریخ اوردفاع مقدس کے دوران بہت زیادہ بہادری کا ثبوت پیش کیا ہے۔
انہوں نے مزید کہا ہےکہ شہداء کے درمیان ایسےافراد بھی تھے کہ جو قلم سے استفادہ کرکے دشمنوں کا مقابلہ کرتے رہے ہیں۔
محسن رضائی نے موجود دورمیں دشمنوں کے ساتھ ہماری ثقافتی جدوجہد کی طرف اشارہ کرتے ہوئےکہا ہے کہ ہمارا ثقافتی اسلحہ دشمنوں کے خوف وہراس کا باعث بنا ہوا ہے۔
انہوں نے مزید کہا ہےکہ شہدائے تبلیغ نے دنیا والوں تک اپنی مظلومیت کا پیغام پہنچایا ہےاورالہی انبیاء کی طرح اپنے فرائض پربخوبی عمل کیا ہےاورخالی ہاتھ اوربہت کم وسائل کے ساتھ تبلیغ کا کام کیا ہے۔
تشخیص مصلحت نظام اسمبلی کےسیکرٹری نے مقدس دفاع کو ایک ثقافتی جنگ قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ ہماری ثقافتی جنگ کا آغازاس وقت ہوا تھا کہ ماوں نے اپنے بیٹوں کی پیشانیوں پرائمہ اطہارعلیہم السلام کے ناموں کی پٹیاں باندھ کرمحاذ جنگ پرروانہ کیا تھا۔
انہوں نے مزید کہا ہےکہ ہمارے انقلاب کی کامیابی کا ایک ہدف دنیا والوں کے کانوں تک عدالت کی آواز کو پہنچانا ، ثقافتی جنگ اوراسلامی اقدارکا تحفظ ہے۔
انہوں نے کہا ہےکہ بعض لوگ اس نظام کےاستقلال اورامن وامان کو اہمیت نہیں دیتے ہیں اورفقروبیکاری کی مشکل کو اس نظام کی گردن پرڈٓالتے ہیں جبکہ کہنا چاہیےکہ ایران میں بیکاری فقط پابندیوں یا پابندیاں لگانے والوں کےحامیوں سے مربوط ہے۔
 
 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

سپاہ پاسداران کی زمینی مشقوں کا آغاز

خبررساں ایجنسی شبستان فوجی مشقوں کے پہلے مرحلے میں، فرضی دشمن کے ٹھکانوں کو مرصاد نامی جدید ترین اسمارٹ اور گائیڈڈ میزائلوں اور راکٹوں سے نشانہ بنایا جارہاہےپیامبر اعظم گیارہ فوجی مشقیں مرکزی ایران کے صحرائی علاقے میں بدھ تک جاری رہیں گی، جن کے دوران سپاہ کی بری فوج کے مختلف یونٹ فرضی دشمن کے خلاف انٹیلی جینس کارروائیاں بھی انجام دیں گے۔ اس دوران بیرونی دشمن کے ہر ممکنہ حملے سے نمٹنے کی غرض سے بری فوج کی توانائیوں کا مظاہرہ کیا جائے گا۔

منتخب خبریں