خبرگزاری شبستان

شنبه ۲۷ آیان ۱۳۹۶

السبت ٢٩ صفر ١٤٣٩

Saturday, November 18, 2017

وقت :   Tuesday, March 14, 2017 خبر کوڈ : 67226

ظہورکے وقت امام زمانہ(ع) کی ظاہری شکل وصورت
خبررساں ایجنسی شبستان: آسمان امامت وولایت کےتاجداراورشیعوں کے دوسرے کے پیشوا حضرت امام حسن مجتبیٰ علیہ السلام اپنی ایک نورانی اوربابرکت حدیث میں غیبت کے دورمیں حضرت قائم آل محمد عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کی لمبی عمرکے بارے میں گفتگو کرتے ہوئے ظہورکے وقت حضرت امام زمانہ عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کی ظاہری شکل وصورت کے بارے میں گفتگو فرمائی ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان کے گروہ مہدویت کی رپورٹ کےمطابق آسمان امامت وولایت کے تاجدار اورشیعوں کے دوسرے کے پیشوا حضرت امام حسن مجتبیٰ علیہ السلام اپنی ایک نورانی اوربابرکت حدیث میں ارشاد فرماتے ہیں: (۔ ۔ ۔ اللہ تعالیٰ غیبت کے دورمیں حضرت بقیۃ اللہ الاعظم حجت بن الحسن امام زمانہ عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کی عمرکو درازکرے گا۔ اس کے بعد اپنی لامحدود طاقت کے ذریعے انہیں چالیس سال سے کم عمرکے جوان کی طرح ظاہرکرے گا۔ 

الحسن بن علی علیهما السلام: «... یطیل الله عمره فی غیبته، ثم یظهره بقدرته فی صورة شابّ دون أربعین سنه.)(۱)

اسی طرح ہروی کہتے ہیں کہ میں نےحضرت امام علی بن موسیٰ الرضا علیہ السلام کی خدمت میں عرض کیا: قیام اورظہورکےوقت آپ کے قائم  عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کی علامت کیا ہوگی؟ تو آٹھویں امام حضرت رضا علیہ السلام نےفرمایا : ان کی علامت یہ ہے کہ حضرت قائم آل محمد عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کی عمر زیادہ ہوگی لیکن وہ شکل وصورت میں جوان نظرآئیں گے، اس طرح کہ اگرکوئی انہیں دیکھے گا تو خیال کرے گا کہ آپ کی عمرچالیس سال یا اس سےکم ہے۔ ان کی دوسری علامت یہ ہے کہ زمانہ گزرنے کے ساتھ وہ بوڑھے نہیں ہوں گے یہاں تک کہ وہ اپنےخالق حقیقی سےجا ملیں ۔

عن الهروی: قال: قلت للرضا علیه السلام ما علامة القائم منکم، أذا خرج؟ قال: «علامته أن یکون شیخ السن، شابّ المنظرحتی أنّ الناظر ألیه لیحسبه ابن أربعین سنه أو دونها و إن من علامته أن لا یهرم بمرور الأیام و اللیالی علیه حتی یأتی أجله.)(۲)

(۱) ۔ کمال الدین، ج ۱، ص 315

(۲) ۔ کمال الدین، ج ۲، ص 652

۶۱۶۶۲۹      

                                                

 

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

معاشرے کے اندر مشترکہ وقف کی ترویج ہونی چاہیے

شبستان نیوز : ادارہ اوقاف و خیراتی امور کے ثقافتی و سماجی امور کے جنرل ڈائریکٹر نے وقف کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ معاشرے کے اندر مشترکہ وقف کی ترویج ہونی چاہیے۔ امامزادوں کے حرم یا ان کے علاوہ دوسرے مقدس مقامات کی ملکیت میں اگر ان کے اپنے اوقاف ہوں تو وہ اپنے تعمیراتی اور ثقافتی امور کے اخراجات وہاں سے پورے کر سکتے ہیں۔

منتخب خبریں