خبرگزاری شبستان

چهارشنبه ۲۶ مهر ۱۳۹۶

الأربعاء ٢٨ المحرّم ١٤٣٩

Wednesday, October 18, 2017

وقت :   Sunday, March 19, 2017 خبر کوڈ : 67284

حضرت فاطمہ زہرا(س)کی ولادت با سعادت مبارک ہو
خبررساں ایجنسی شبستان شہزادی کونین حضرت فاطمہ زہرا سلام اللہ علیہا کی ولادت با سعادت کے موقع پرآج پورے ایران میں جشن کا سماں ہے، ہر طرف لوگ جشن منا رہے ہیں اور جگہ جگہ مٹھائیاں تقسیم کر رہے ہیں.

ایران کے مقدس شہروں مشہد اور قم میں دسیوں ہزارعاشقان اہل بیت عصمت و طہارت فرزند رسول حضرت امام رضا علیہ السلام کے حرم مطہر اور حضرت فاطمہ معصومۂ قم سلام اللہ علیہا کے حرم مطہر میں موجود ہیں اور بی بی دو عالم کی ولادت با سعادت کا جشن منا رہے ہیں-

محفل میلاد کے مرکزی اجتماعات بھی مشہد مقدس اور قم المقدسہ میں جاری ہیں جبکہ دارالحکومت تہران سمیت ایران کے سبھی چھوٹے بڑے شہروں کی مساجد اور امام بارگاہوں میں بھی جشن کا اہتمام کیا گیا ہے-

عراق، پاکستان اور ہندوستان سمیت دنیا کے گوشہ و کنار سے خبریں موصول ہو رہی ہیں کہ شہزادی کونین کی ولادت باسعادت کی مناسبت سے جگہ جگہ جشن اور محفل میلاد کا اہتمام کیا جا رہا ہے-

دختر رسول حضرت فاطمہ زہرا سلام اللہ علیہا بیس جمادی الثانی ہجرت سے آٹھ سال قبل پیغمبر اسلام حضرت محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم اور حضرت خدیجہ سلام اللہ علیہا کے بیت الشرف میں اس دنیا میں تشریف لائیں-

شہزادی کونین اعلی الہی اور انسانی کمالات و فضائل کی حامل تھیں- آپ کی الہی فضیلت میں یہی کافی ہے کہ آپ جب بھی بزم رسالت میں تشریف لاتیں پیغمبر اسلام صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم آگے بڑھ کر آپ کا استقبال کرتے اور بی بی دوعالم کو اپنی جگہ پر بٹھاتے-

حضرت فاطمہ زہرا سلام اللہ علیہا کے یوم ولادت باسعادت پر ایران اور دیگر ملکوں میں یوم مادر اور یوم خواتین بھی منایا جاتا ہے- اس مبارک موقع پر سحرعالمی نیٹ ورک اپنے تمام ناظرین، سامعین اور چاہنے والوں کو دل کی گہرائیوں سےمبارکباد پیش کرتا ہے۔

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

آیت اللہ جعفر سبحانی:

جوانی میں علم و دانش کے حصول پر توجہ دینی چاہئے

سماجی: ایران کے نامور عالم دین اور شیعہ مرجع تقلید آیت اللہ جعفر سبحانی نے کہا جوانی کے زمانے میں علم و دانش حاصل کرنے اور تالیف و تصنیف پر زیادہ توجہ دینی چاہئے انہوں نے کہا اس عمر میں زیادہ مطالعہ اور علمی مباحثہ کرکے اسے لکھنا چاہئے کیونکہ اس زمانے کا علم بڑھاپے میں انسان کے لئے روشن چراغ کی طرح ہوتا ہے۔

منتخب خبریں