خبرگزاری شبستان

دوشنبه ۲ بهمن ۱۳۹۶

الاثنين ٦ جمادى الأولى ١٤٣٩

Monday, January 22, 2018

وقت :   Monday, July 17, 2017 خبر کوڈ : 68668

برطانوی شہریوں کی جانب سے سعودی عرب کو اسلحہ فروخت کرنے کی مخالفت
بین الاقوامی: برطانیہ میں انجام پانے والے سروے کے نتیجے میں انکشاف ہوا ہے کہ برطانوی شہریوں کی اکثریت سعودی عرب کو اسلحہ فروخت کرنے کی مخالف ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان نے بعض غیرملکی ذرائع ابلاغ کے حوالے سے خبر شائع کی ہے کہ برطانوی شہریوں نے وزیراعظم کو خطاب کرکے کہا کہ سعودی عرب کو اسلحے کی فروخت روک دی جائے کیونکہ یہ ملک یمن کے بے گناہ شہریوں پر ظلم ڈھارہا ہے۔

روزنامہ انڈیپنڈنٹ نے ایک سروے کیا ہے جس میں انکشاف ہوا ہے کہ برطانوی شہریوں کی اکثریت سعودی عرب کو اسلحہ فروخت کرنے کی مخالف ہے۔

واضح رہے کہ اقوام متحدہ اور دیگر انسانی حقوق کے اداروں کی رپورٹ کے مطابق سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں نے یمن میں اسپتالوں اسکولوں اور شادی کی تقریبات پر بمباری کی ہے۔

یاد رہے کہ اس سروے میں 58 فیصد برطانوی شہریوں نے سعودی عرب کو اسلحہ فروخت کرنے کی مخافلت کی ہے۔

642267

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

دوسروں کو امن سے محروم کرنے کا وقت ختم

خبررساں ایجنسی شبستان اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے آج بروز پیر فایننشل ٹائمز میں اپنے ایک بیان میں اس بات پر زور دیا کہ آج ماضی کے برعکس دوسروں کو امن سے محروم کرنے کا وقت ختم ہو چکا اور سیکورٹی نیٹ ورک قائم کرنے کا وقت آ پہنچا ہے اور امن کو صرف اپنے لئے نہیں بلکہ دوسروں کے لئے بھی برقرار کرنا پڑتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ خلیج فارس کے علاقےمیں ایک خاص گروہ کیلئے امن قائم کرنے کا خیال اب ماضی کا حصہ بن چکا ہے اس لئے کہ خلیج فارس کے علاقے کے تمام ملکوں کے مفادات مشترکہ ہیں۔

منتخب خبریں