خبرگزاری شبستان

دوشنبه ۲۷ آذر ۱۳۹۶

الاثنين ٣٠ ربيع الأوّل ١٤٣٩

Monday, December 18, 2017

وقت :   Friday, August 11, 2017 خبر کوڈ : 68915

سعودی حکمرانوں پر تنقید، عالم دین کو قید کی ‎سزا
خبررساں ایجنسی شبستان سعودی عرب کی نمائشی عدالت نے ملک کے سرکردہ شیعہ عالم دین شیخ حسین الراضی پر اشتعال پھیلانے، سرکاری فیصلوں کی مخالفت کرنے اور فعال سیاسی کارکنوں کی حمایت کا الزام عائد کیا ہے.

شیخ حسین الراضی کے خلاف نمائشی عدالت کے فیصلے پر سعودی عرب کے عوامی حلقوں کی جانب سے سخت ردعمل سامنے آ رہا ہے۔ فعال سیاسی کارکنوں اور انسانی حقوق کی تنظیموں نے عدالتی فیصلے کو ظالمانہ اور گمراہ کن قرار دیا ہے۔
 شیخ حسین الراضی، سعودی عرب کی شاہی حکومت کی پالیسیوں کے خلاف کھل کر تنقید اور ملک میں آزادی اور انصاف کے قیام کا مطالبہ کرتے رہے ہیں۔
انہوں نے سعودی حکام کی جانب سے سرکردہ عالم دین آیت اللہ نمر باقر النمر کو سزائے موت دے کر شہید کیے جانے کے فیصلے پر بھی کڑی نکتہ چینی کی تھی جس کے بعد انہیں گرفتار کرلیا گیا تھا۔

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

ثقافت اور اس کے موضوعات کو پہچانے بغیر فقہ کوئی حکم نہیں دے سکتی

شبستان نیوز : آیت اللہ مبلغی نے کہا ہے کہ اعلیٰ اقدار اور نیک کاموں کو ترجیح دینے کے حوالے سے دین کی نظریے کو سامنے نہ رکھنا خدا پر افتراء باندھنے کے مترادف ہے۔ انہوں نے کہا کہ ثقافت اور اس کے موضوعات کو پہچانے بغیر فقہ کوئی حکم نہیں دے سکتی۔

منتخب خبریں