خبرگزاری شبستان

سه شنبه ۲۶ تیر ۱۳۹۷

الثلاثاء ٥ ذو القعدة ١٤٣٩

Tuesday, July 17, 2018

وقت :   Saturday, September 02, 2017 خبر کوڈ : 69186
رجب طیب اردوان:
روہنگیا کے مسلمانوں کے قتل عام پر خاموشی اس جرم میں شریک ہونے کے مترادف ہے
بین الاقوامی: ترکی کے صدر نے کہا میانمر کے مسلمانوں کے قتل عام پر دنیا بھر میں سکوت چھایا ہوا ہے اور یہ سکوت اس جرم میں شریک ہونے کے مترادف ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان نے نیوز ایجنسی رائٹرز کے حوالے سے خبر شائع کی ہے کہ ترکی کے صدر رجب طیب اردوان نے کہا کہ گذشتہ ایک ہفتے کے دوران میانمر میں سینکڑوں مسلمانوں کا قتل اس ملک کے روہنگیا نامی علاقے میں مسلمانوں کی نسل کشی ہے۔

تازہ ترین رپورٹ کے مطابق میانمر کے شمال مغربی علاقے میں گذشتہ ہفتے کی جھڑپوں میں تقریبا 400 مسلمان قتل ہوئے ہیں اور اتنی کم مدت میں میانمر میں اتنے زیادہ مسلمانوں کے قتل کی اس سے پہلے کوئی مثال نہیں ہے۔

ترکی صدر نے استنبول میں عید قربان کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا میانمر میں مسلمانوں کی نسل کشی پر پوری دنیا خاموش تماشائی بنی بیٹھی ہے۔

انہوں نے مزید کہا اس قتل عام میں خاموش رہنے والے بھی اس قتل میں برابر شریک ہیں۔

واضح رہے کہ میانمر میں مسلمانوں کے قتل عام کے بعد 38 ہزار مسلمان بنگلہ دیش بھاگ گئے۔

ترکی کے صدر نے کہا کہ وہ 12 ستمبر 2017 کو اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں میانمر کے مسلمانوں کے قتل عام کا مسئلہ اٹھائیں گے۔

652999

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

عشرہ کرامت کو حضرت حجت(عج) کی کریمہ حکومت سےمتصل کرنےکےراستے

خبررساں ایجنسی شبستان: مہدویت مکتب تشیع کا عظیم عقیدہ کہ جو دیگرمکاتب اورادیان میں بھی موجود ہے اوربشریت کے اندرامید کی روح زندہ کرتا ہے،ایک ایسا مفاہیم کہ جس پر عشرہ کرامت جیسی مختلف مناسبتوں میں زیادہ سے زیادہ توجہ دینی چاہیے۔

منتخب خبریں