خبرگزاری شبستان

دوشنبه ۴ تیر ۱۳۹۷

الاثنين ١٢ شوّال ١٤٣٩

Monday, June 25, 2018

وقت :   Monday, September 11, 2017 خبر کوڈ : 69286

بین الاقوامی: بنگلہ دیش کے وزیرخارجہ نے انکشاف کیا ہے کہ میانمار کی سیکورٹی فورسز نے اس ملک کے صوبہ راخین میں 3000 مسلمانوں کو قتل کیا ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان نے بعض غیر ملکی ذرائع ابلاغ کے حوالے سے خبر شائع کی ہے کہ بنگلہ دیش کے وزیرخارجہ ابوالحسن محمود علی نے کہا کہ میانمار میں ظلم و تشدد سے بھاگ کر بنگلہ دیش پہنچنے والے میانمار کی مسلمانوں کی تعداد تین لاکھ ہوگئی ہے۔

انہوں نے مزید کہا میانمار کی سیکورٹی فورسز کے ہاتھوں حالیہ دنوں میں قتل ہونے والے مسلمانوں کی تعداد کم از کم تین ہزار ہے۔

انہوں نے کہا میانمار کی سیکورٹی فورسز نے اس ملک کے صوبہ راخین میں تین ہزار سے زائد روہنگیائی مسلمانوں کو قتل کرکے ان کے گھروں کو نذر آتش کردیا ہے۔

ابوالحسن محمود نے کہا عالمی برادری میانمار کے صوبہ راخین میں مسلمانوں کے قتل عام کو ان کی نسل کشی سمجھتی ہے۔

انہوں نے کہا گذشتہ دو ہفتوں کے دوران تین لاکھ روہنگیائی مسلمان بنگلہ دیش میں داخل ہوئے ہیں جبکہ چار لاکھ افراد میانمار کی سیکورٹی فورسز کے شکنجوں کے ڈر سے اس سے پہلے بنگلہ دیش پہنچ چکے ہیں۔

654795

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

سردارحسین سلامی:

مشترکہ زندگی کی بنیاد محبت اوردرگزرپرقائم ہے

خبررساں ایجنسی شبستان: سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کےکمانڈران چیف نےاس مطلب کہ اسلام اورایران نے ہمیں ایک واحد جسم کےعنوان آپس میں جوڑا ہوا ہے،کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ مشترکہ زندگی کی بنیاد محبت اوردرگزرپرقائم ہے۔

منتخب خبریں