خبرگزاری شبستان

دوشنبه ۲۷ آذر ۱۳۹۶

الاثنين ٣٠ ربيع الأوّل ١٤٣٩

Monday, December 18, 2017

وقت :   Wednesday, October 11, 2017 خبر کوڈ : 69677

مساجد، ثقافتی یلغار کا مقابلہ کرنے کے لیے بہترین رہنما ہیں
شبستان نیوز : صوبہ اردبیل کے ادارہ تبلیغات اسلامی کے جنرل ڈائریکٹر نے کہا ہے کہ مساجد وہ ادارے ہیں جو ثقافتی یلغار کا مقابلہ کرنے کے لیے بہترین طریقے سے رہنمائی کرتے ہیں اور اس سلسلے میں ہمیں کافی کامیابیاں حاصل ہوئی ہیں۔

صوبہ اردبیل کے ادارہ تبلیغات اسلامی کے جنرل ڈائریکٹر حجت الاسلام مہدی ستودہ نے آج اردبیل میں شبستان نیوز ایجنسی کے نمائندے سے بات چیت کرتے ہوئے کہا ہے کہ رہبر معظم آیت اللہ خامنہ ای نے 2012 عیسوی میں مساجد کو ثقافتی مراکز کے عنوان سے متعارف کروایا تھا اور اس بات پر زور دیا تھا کہ  معاشرے کی تربیت مسجدوں کو انجام دینی چاہیے اور عوام کو مسجدی ہونا چاہیے۔

انہوں نے اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے کہا کہ مساجد وہ ادارے ہیں جو ثقافتی یلغار کا مقابلہ کرنے کے لیے بہترین طریقے سے رہنمائی کرتے ہیں اور اس سلسلے میں ہمیں کافی کامیابیاں حاصل ہوئی ہیں۔

انہوں نے اس بات کی بھی وضاحت کی کہ  امام خمینیؒ مساجد کو اسلام کا اہم مورچہ سمجھتے تھے اور انہوں نے ان کی حفاظت پر بہت زیادہ زور دیا ہے۔ ہماری موجودہ نسل اسی فرمان پر عمل کرتےہوئے مساجد کو زیادہ سے زیادہ اہمیت دیتی ہے۔

حجت الاسلام ستودہ نے یہ بھی کہا کہ نوجوانوں اور جوانوں کا مساجد میں آنا اس بات کی دلیل ہے کہ مساجد اپنی کام صحیح طریقے سے کر رہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جہاں بھی معاشرے کو کوئی مشکل درپیش ہوئی تو اس کا حل مساجد ہی نے بتایا۔ آج جب کہ مساجد میں لوگوں کی تعداد بھی پہلے کی نسبت بڑھ رہی ہے تو اس کا مطلب یہ ہے کہ لوگوں کا اعتماد بھی مسجد پر بڑھتا چلا جا رہا ہے۔

661525

 



تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

ثقافت اور اس کے موضوعات کو پہچانے بغیر فقہ کوئی حکم نہیں دے سکتی

شبستان نیوز : آیت اللہ مبلغی نے کہا ہے کہ اعلیٰ اقدار اور نیک کاموں کو ترجیح دینے کے حوالے سے دین کی نظریے کو سامنے نہ رکھنا خدا پر افتراء باندھنے کے مترادف ہے۔ انہوں نے کہا کہ ثقافت اور اس کے موضوعات کو پہچانے بغیر فقہ کوئی حکم نہیں دے سکتی۔

منتخب خبریں