خبرگزاری شبستان

شنبه ۲۵ آذر ۱۳۹۶

السبت ٢٨ ربيع الأوّل ١٤٣٩

Saturday, December 16, 2017

وقت :   Monday, November 20, 2017 خبر کوڈ : 70303

لبنان کا قاہرہ میں وزرائےعرب کی نشست کو دوٹوک پیغام
خبررساں ایجنسی شبستان: لبنان نے قاہرہ کی نشست میں شرکت کی سطح کو کم کرنے کے ذریعے اس نشست کے شرکاء کو ایک واضح اوردوٹوک پیغام ارسال کیا ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان نے العالم کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ المنارٹی وی چینل نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ لبنان نے فیصلہ کیا ہےکہ وہ قاہرہ میں عرب لیگ کے وزرائے خارجہ کے ہنگامی اجلاس میں اپنی شرکت کی سطح کو وزیرخارجہ سے کم کرکے ایک نمائندے کو بھیجے گا۔ یہ ایک سفارتی پیغام تھا کہ جسے لبنان نےاس اجلاس کے شرکاء تک پہنچایا ہے۔ لبنان کے اس اقدام کا ظاہری معنیٰ کیا ہے؟

لبنان کےسابق وزیرخارجہ فارس بوئز نے اس بارے میں کہا ہےکہ اس اجلاس میں لبنان اورکچھ دیگرممالک کے نچلی سطح کے نمائندوں کی شرکت ایک واضح اورشفاف پیغام رکھتی ہےکہ یہ ممالک اس اجلاس کے بارے میں مختلف نظریات رکھتے ہیں ورنہ ان ممالک کے وزرائے خارجہ کو بھی اس اجلاس میں شرکت کرنی چاہیے تھی کیونکہ یہ اجلاس وزرائے خارجہ کی سطح کا اجلاس تھا۔

المنارنےمزید کہا ہےکہ عرب لیگ کا منشوراس نکتےکی تاکید کرتا ہےکہ تمام اراکین کی موجودگی کی صورت میں ہی عرب لیگ کوئی فیصلہ کرسکتی ہے اوراس کا مطلب یہ ہےکہ ایران کی مذمت کے لیے اس اجلاس کو منعقد کرنے کا سعودی عرب کا ہدف یقینا خطے کے موجودہ حقائق کے مخالف ہوگا۔

لبنان کے سابق وزیرخارجہ نےکہا ہے کہ سعودی عرب کی عادت یہ ہےکہ وہ خطےکے بحرانوں میں اہم کردارادا کررہا ہے لیکن اب وہ خود براہ راست اس میدان میں داخل ہوچکا ہےکہ جس کی ایک مثال لبنانی وزیراعظم کو استفعیٰ پرمجبوکرنا ہے۔ بنابریں سوال یہ ہےکہ کیا عربی ممالک لبنانی عوام کی حمایت کرنا چاہتے ہیں؟

670586

 

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

منتخب خبریں