خبرگزاری شبستان

شنبه ۲۵ آذر ۱۳۹۶

السبت ٢٨ ربيع الأوّل ١٤٣٩

Saturday, December 16, 2017

وقت :   Saturday, December 02, 2017 خبر کوڈ : 70444

امام زمانہ(عج) کن افراد سےملاقات کرتے ہیں؟
خبررساں ایجنسی شبستان: امام زمانہ علیہ السلام توقع رکھتے ہیں کہ ان کا شیعہ تمام اخلاق فضائل سے آراستہ ہو، دینی دستورات کا پابند ہو، شیطانی وسوسوں سے پرہیزکرے اوراخلاص، ایثار، احسان اورعبادت کرنے والا ہو تاکہ پھرآنحضرت علیہ السلام کے نزدیک ہوسکے۔

خبررساں ایجنسی شبستان کی رپورٹ کےمطابق اللہ تعالیٰ، نبی اکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم، ائمہ معصومین علیہم السلام اورحضرت ولی عصرعلیہ السلام نے دینی احکام پرعمل کرنے، نیک کاموں کا انجام دینے، لوگوں کی خدمت کرنے، گناہوں سےاجتناب اورحقوق الناس کا ادا کرنےکی کوشش اور ایک حلال زندگی رکھنےکا حکم دیا ہےاورایک شیعہ کو اس محوراورمرکز کےگرد حرکت کرنی چاہیے۔ بنابریں امام زمانہ عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کا حکم بھی وہی اللہ اوراس کے رسول کا حکم ہے۔ لیکن بعض اوقات وہ اپنے چاہنے والوں کو کچھ مخصوص نصیحتیں کرتے ہیں کہ البتہ وہ انہیں افراد سےمخصوص نہیں ہیں بلکہ تمام منتظرین کو اسی قسم کےکاموں کا اہل ہونا چاہیے۔

نقل ہوا ہےکہ ایک مرد امام زمانہ علیہ السلام کی ملاقات کا طالب تھا اوراس نےاس راہ میں بہت زیادہ ریاضت اورمحنت کی تھی۔ ایک رات اسےخوشخبری دی جاتی ہےکہ تم فلاں شہرکے بازارمیں فلاں دوکان پرامام زمانہ علیہ السلام سےملاقات کرو گے۔ وہ اس شہرمیں جاتا ہے اوراپنے آپ کو دوکان پرپہنچاتا ہےاوروہاں پربیٹھ کرامام زمانہ عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف سےملاقات کرتے ہیں۔ اسی وقت ایک بوڑھی عورت نے بازارمیں فروخت کرنے کےلیے ایک تالا لایا۔ اہل بازار میں سے ہرایک انتہائی کم قیمت پریہ تالا خریدنا چاہتے تھے۔ لیکن اس دوکان کے ساتھ بیٹھے ہوئے ایک دوکاندارنے تالےکی قیمت کا اعلان کیا اورکہا کہ میں بہت کم قیمت پراسےخریدوں گا اوراس نفع کے ساتھ اسےفروخت کروں گا اوریہی میرے لیےکافی ہے۔ وہ بوڑھی عورت خوشی کے ساتھ وہ تالا بیج کرچلی گئی۔ اس وقت امام عصرعلیہ السلام نے اس ملاقات کرنے والےمرد کی طرف دیکھتےہوئے فرمایا: اس طرح بن جاو تاکہ ہم خود تمہاری ملاقات کریں اوراپنے آپ کو ریاضت اورمحبت کی زحمت میں مبتلا نہ کرو۔(1)

امام مہدی علیہ السلام فرماتے ہیں: (فَیَعمَل کُلُ امرءٍ بِما یَقرُبُ بِه مِن مَحبّتنا و یتجَّنب ما یدنیه من کَراهتنا و سَخَطِنا) تم میں سے ہرشخص وہ کام کرنا چاہیےکہ جو اسے ہماری محبت کےقریب کرے اورہراس کام سے دوری اختیارکرنی چاہیےکہ جو اسے ہماری ناراضگی اورہمارے غصے کےنزدیک کرے۔ (2)

امام صادق علیہ السلام فرماتے ہیں: (مَن سَرَّه اَن یَکونَ مِن اصحابِ القائم فَلینتظِر و لیَعمَل بِالوَرعِ و محاسِنِ الأخلاق و هو منتظر...) جوشخص بھی یہ پسند کرتا ہےکہ وہ قائم علیہ السلام کےاصحاب میں سے شمارہو تو اسےانتظارکرنا چاہیے اوراچھےاخلاق کا مالک ہونا چاہیےاوراگروہ اسی انتظار کی حالت میں مرجائےاوراس کی موت کے بعد حضرت قائم علیہ السلام ،قیام کریں تو اسےاس شخص کا سا ثواب ملے گا کہ جس نے ان کے زمانےکو پالیا ہو۔(3)

بنابریں تقویٰ اوراچھےاخلاق کے ساتھ انتظارحضرت ولی عصرعجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کے ساتھیوں اوران کےلائق منتظرین کی علامات ہیں۔

مآخذ:

1-آیینه اسرار، ص 17  2

2- بحارالانوار، ج53، ص 176

3- غیبت طوسی، ص 200

حجۃ الاسلام جواد محدثی کی کتاب( زندگی مہدوی( اخلاق واوصاف منتظران) سے اقتباس

672204

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

منتخب خبریں