خبرگزاری شبستان

سه شنبه ۲۹ آیان ۱۳۹۷

الثلاثاء ١٢ ربيع الأوّل ١٤٤٠

Tuesday, November 20, 2018

وقت :   Sunday, January 21, 2018 خبر کوڈ : 71112
آیت اللہ سید محمد حسینی شاہرودی:
مسلمانوں کےدرمیان وحدت، دشمنوں کےمقابلےمیں ایک تیزترین ہتھیارہے
خبررساں ایجنسی شبستان: ایران کےصوبہ کردستان کے نمائندہ ولی فقیہ نےمسلمانوں کے درمیان وحدت کو دشمنوں کےمقابلے میں ایک تیزدھارہتھیارقراردیتے ہوئےکہا ہے کہ ایرانی عوام مختلف مذاہب اوراقوام کےباوجود اتحاد ووحدت کےعملی نمونے پرفائز ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان شعبہ سنندج نےصوبہ کردستان کے نمائندہ ولی فقیہ کے دفترکی سائٹ کے حوالے سے نقل کیا ہےکہ آیت اللہ سید محمد حسینی شاہرودی نے 20جنوری کو انڈونیشیا کی تحریک العلماء آرگنائزیشن کے معاون سےملاقا ت کے دوران کہا ہے کہ اسلامی انقلاب کی تاریخ کے دوران اس سرزمین کی عوام نے ثابت کردیا ہےکہ ان کےنزدیک ہرچیزسےجس کی اہمیت ہے وہ دین اسلام اورانقلاب کی اقدارکا دفاع ہےاوران اقدارکی حفاظت کے لیے ہرقسم کی قربانی کے لیے آمادہ ہیں۔

انہوں نےمزید کہا ہےکہ ایرانی عوام نے انہیں بنیادی اصولوں پراعتماد کرکے دشمنوں کے حملوں کا ڈٹ کرمقابلہ کیا ہےاورمختلف میدانوں میں ترقی کی منازل طے کی ہیں۔

آیت اللہ شاہرودی نےمسلمانوں کے درمیان وحدت کو دشمنوں کےمقابلے میں تیزدھارترین اسلحہ قرار دیتے ہوئےکہا ہےکہ اسلامی ممالک کے درمیان متعدد پروگراموں کےانعقاد اورآپس میں روابط وحدت کے فروغ کی راہ ہموارکرسکتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا ہےکہ آج بہت سے اسلامی اوریہاں تک کہ غیراسلامی ممالک بھی قائدانقلاب اسلامی کی باتوں کو مانتے ہیں کہ جو اسلامی انقلاب کے دشمنوں کےغم وغصےکا سبب بنی ہوئی ہے۔

انڈونیشیا کی تحریک العلماء آرگنائزیشن کےمشیرنے بھی اس ملاقات میں کہا ہےکہ انڈونیشیا کی عوام کے سامنے مذاہب کے بارے میں ایران کی حقیقی پالیسیوں کو بیان ہونا چاہیے کیونکہ انڈونیشیا کی عوام ان حقائق سےآگاہ نہیں ہے۔

انہوں نےمزید کہا ہےکہ انڈونیشیا سمیت بہت سےممالک کو ایران سے سیکھنا چاہیےکہ مختلف میدانوں میں پابندیوں کےباوجود ایران نے امیاب عمل کیا ہے۔

683794

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز

سماجی: اسلامی جمہوریہ ایران کے شہر بندرعباس میں 8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز ہوچکا ہے جس میں دنیا بھر سے مسلمان دانشور، علماء، مفکرین اور عمائدین شرکت کررہے ہیں۔

منتخب خبریں