خبرگزاری شبستان

چهارشنبه ۲۳ آیان ۱۳۹۷

الأربعاء ٦ ربيع الأوّل ١٤٤٠

Wednesday, November 14, 2018

وقت :   Monday, February 12, 2018 خبر کوڈ : 71442
ڈاکٹرولایتی:
ایران اپنی دفاعی اورمیزائل طاقت کےحوالےسےکسی سےاجازت نہیں لےگا
خبررساں ایجنسی شبستان: بین الاقوامی امورمیں قائد انقلاب اسلامی کےمشیرنےتہران میں فرانس کے صدرکے ممکنہ سفرکے بارے میں کہا ہےکہ اگرماکرون نے تہران کے سفرکے دوران ہمارے میزائل سسٹم کے بارے میں کوئی بات کی تو انہیں اسلامی جمہوریہ ایران کے منفی جواب کا سامنا کرنا پڑے گا۔

خبررساں ایجنسی شبستان نے بین الاقوامی امورمیں قائد انقلاب اسلامی کےمشیرکے دفترکے حوالے سے نقل کیا ہےکہ علی اکبرولایتی نےعشرہ فجرکی مناسبت سےمنعقد ہونے والے جشنوں میں شرکت کرنے والےغیرملکی مہمانوں بالخصوص جاک ہوگارڈ کی سربراہی میں فرانسیسی وفد سےملاقات کرتے ہوئے ایران اورفرانس کے تعلقات کی طرف اشارہ کیا ہے اورکہا ہے کہ دونوں ممالک کی ملتوں کے درمیان اچھی یادیں قائم ہیں بالخصوص اسلامی انقلاب ایران کے دوران امام خمینی کی نوفل نوشاتو میں موجودگی دونوں ممالک کی ملتوں کے درمیان ایک قسم  کا قلبی رابطہ قائم ہوگیا ہوا ہے۔

انہوں نے دونوں ممالک کے مابین تعلقات کے استحکام کی غرض سے طرفین کے حکام کی کوششوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہےکہ بعض متناقض اوردو طرفہ موقف ماضی کی کوششوں کو متاثرکرسکتے ہیں۔

ڈاکٹرولایتی نےمزید کہا ہےکہ ہمیں امید تھی کہ مسٹرامانوئل ماکرون ایٹمی معاہدے کےحوالے سے مستحکم اورٹھوس موقف اختیارکریں گے نہ یہ کہ ٹرمپ کی تاکید کے ساتھ  ایٹمی معاہدے کی اصلاح کی غرض سے جرمنی اوربرطانیہ کے ساتھ مل نشست منعقد کریں۔

انہوں نے فرانس کے صدرکےتہران کے ممکنہ دورکے بارے میں کہا ہےکہ اگرماکرون نے اپنے اس سفرکے دوران ایران کے میزائل سسٹم کے بارے میں کوئی بات کی تو یقینا انہیں اسلامی جمہوریہ ایران کے منفی جواب کا سامنا کرنا پڑے گا۔

بین الاقوامی امورمیں قائدانقلاب اسلامی کے مشیرنے مزید کہا ہے کہ وہ ایران کے میزائل سسٹم کے بارے میں کسی سے اجازت نہیں لیں گے اوراپنی دفاعی ضروریات کے پیش نظر میزائل سسٹم میں توسیع کریں گے۔

انہوں نے لبنان کے استحکام کے موضوع کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہےکہ اس حالیہ نصف صدی کے دوران لبنان میں اس وقت کا امن وامان اوراستحکام موجود نہیں رہا ہے۔ لہذا ایران کی طرح فرانس کو بھی لبنان میں موجود سیاسی استحکام اورامن وامان کی حمایت کرنی چاہیے۔

ولایتی نےلبنان اورشام کی سلامتی کو ایک دوسرے کے مرہون منت قراردیتے ہوئےکہا ہےسکہ بشاراسد، شام میں استحکام کا مرکزی نقطہ ہے اورآج اس ملک کے عیسائی بھی سمجھ چکے ہیں کہ اقتدارمیں ان کی موجودگی کس قدراہمیت رکھتی ہے۔

انہوں نے فرانسیسی وفدسے خطاب کرتے ہوئے یمن کے حالات کے بارے میں کہا ہے کہ اگرسعودی عرب والوں نے یمن کی جنگ کو جاری رکھنے پراصرارکیا تو آپ یقین کرلیں کہ یمن، سعودی عرب والوں کے لیے ویتنام بن جائے گا۔

689145

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز

سماجی: اسلامی جمہوریہ ایران کے شہر بندرعباس میں 8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز ہوچکا ہے جس میں دنیا بھر سے مسلمان دانشور، علماء، مفکرین اور عمائدین شرکت کررہے ہیں۔

منتخب خبریں