خبرگزاری شبستان

یکشنبه ۲۹ بهمن ۱۳۹۶

الأحد ٣ جمادى الثانية ١٤٣٩

Sunday, February 18, 2018

وقت :   Tuesday, February 13, 2018 خبر کوڈ : 71461

امام مہدی(عج) کو منتظَرکیوں کہا جاتا ہے؟
خبررساں ایجنسی شبستان: انتظارفرج، اخلاص کی علامت ہے۔ امام جواد علیہ السلام سےامام زمانہ علیہ السلام کے لقب منتظَرکے بارے میں سوال کیا گیا تو آپ نےفرمایا: کیونکہ ان کی غیبت کی مدت طولانی اوربہت زیادہ ہےاورمخلصین ان کے قیام کے انتظارمیں ہیں اورشکاکین ان کا انکاراور منکرین ان کی یاد کا مذاق اڑانے والے ہیں۔

خبررساں ایجنسی شبستان کی رپورٹ کےمطابق اللہ تعالیٰ سورہ مبارکہ اعراف میں فرماتا ہے:«قَالَ قَدْ وَقَعَ عَلَيْكُمْ مِنْ رَبِّكُمْ رِجْسٌ وَغَضَبٌ أَتُجَادِلُونَنِي فِي أَسْمَاءٍ سَمَّيْتُمُوهَا أَنْتُمْ وَآبَاؤُكُمْ مَا نَزَّلَ اللَّهُ بِهَا مِنْ سُلْطَانٍ فَانْتَظِرُوا إِنِّي مَعَكُمْ مِنَ الْمُنْتَظِرِينَ»(1) ہود نےکہا: تمہارے رب کی طرف سے تم پرعذاب اورغضب مقررہوچکا ہے، کیا تم مجھ سے ایسے ناموں کے بارے میں جھگڑتے ہو جو تم نے اورتمہارے باپ دادا نے رکھ لیے ہیں؟اللہ نےتو اس بارے میں کوئی دلیل نازل نہیں کی ہے پس تم انتظارکرومیں بھی تمہارے ساتھ انتظارکروں گا۔

نکات:

1۔ امام رضا علیہ السلام نے فرمایا: صبرکرنا اورانتظارفرج کتنی اچھی بات ہےکیا تم نےنہیں سنا کہ عبد صالح نےفرمایا:«انتَظروا اِنَّی مَعَکُم مِنَ المنتَظِرین) پس انتظارکرو میں بھی تمہارے ساتھ انتظار کروں گا۔ (2)

2۔ پیغمبراکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نےفرمایا: «افضَلُ العِبادةِ انتِظارُ الفَرَج) انتظارفرج افضل ترین عبادت ہے۔(3)

3۔ ہرشخص اپنی زندگی میں انتظاراورامید رکھتا ہےالبتہ انسان کی زندگی بھی انہیں امیدوں سے وابستہ ہے۔ اگرکسی کی امید کا چراغ بجھ جائے تو وہ کام کےپیچھے نہیں جاتا ہے۔ البتہ دیکھنا چاہیے کہ کون سےانتظارکی اہمیت ہے؟ تمام لوگ امید لگائے بیٹھے ہیں لیکن روشن خیال وہ ہےکہ جو عالم امن کےانتطارمیں ہواورتمام لوگوں کی فکرمیں ہو۔

4۔ معلوم ہونا چاہیےکہ انتظارایک عمل ہے کیونکہ ہماری روایات میں آیا ہے : «افضَلُ الاعمالِ» (افضل الحالات) نہیں آیا ہے۔ بنابریں انتظارعمل کا نام ہےنہ کہ حالت، سکوت اورسکون کا۔ جو انسان اپنےمسافرکا منتظرہوتا ہے یا جو کسان اپنے پھل کے پکنےکا منتظرہوتا ہے وہ آسودہ خاطرہوکرنہیں بیٹھتا ہے ۔ ہم کہ جو اپنے مولا کے منتظرہیں تو ہمارے اعمال اورکردار کو اپنے مولا کےاعمال اور کردارکے مطابق ہونا چاہیے۔ لہذا منتظریعنی تلاش وکوشش کرنے والا انسان۔

5۔انتظاریعنی موجودہ صورتحال پراعتراض اوررحمت اورمعرفت کے دروازوں کے کھلنےکی امید۔ انتظاریعنی یہ کہ میں دنیا کے عدل وانصاف سے بھرجانےکا منتظرہوں۔ امام زمانہ علیہ السلام کی دعائےافتتاح میں آیا ہے:«اللَّهُمَّ اِنَّا نَشکوُا الیک) پروردگارا ہم تیری بارگاہ میں شکایت کرتے ہیں۔ یعنی ہم زمین پرموجود طاغوتی نظاموں کو قبول نہیں کرتے ہیں۔ بنابریں ہم کس قسم کی حکومت کو قبول کرتے ہیں تو اس کا جواب اسی دعا میں آیا ہے: «اِنّا نَرغَبُ اِلَیمَ فی دَولَه کَریمَه».

6۔ شہید مطہری حجۃ الاسلام راشد سےنقل کرتے ہوئےکہتے ہیں کہ جب رات ہوتی ہے تو ہم طلوع خورشید کا انتظارکرتے ہیں تاہم خورشید کے انتظارکا یہ مطلب نہیں ہےکہ ہم تاریکی میں بیٹھے رہیں۔ ہم خورشید کےمنتظربھی ہیں اورکھڑے ہوکرکام بھی کرتے ہیں اورچراغ بھی روشن کرتے ہیں۔

7۔ جو شخص مصلح کا منتظرہےاسے خود بھی صالح ہونا چاہیے۔ لاتعلق، بےغیرت، فقراورعاجز انسان تو نہیں کہہ سکتا یا حجت بن الحسن علیہ السلام، تشریف لائیں۔ جن لوگوں نےغیبت کے دورمیں دین کے دفاع میں کوئی کردارادا نہیں کیا ہے وہ کس طرح کہہ سکتے ہیں کہ امام مہدی علیہ السلام تشریف لائیں؟

8۔ انتظارفرج، اخلاص کی علامت ہے۔ امام جواد علیہ السلام سے امام زمانہ علیہ السلام کےلقب منتظَرکے بارے میں سوال کیا گیا تو آپ نےفرمایا: کیونکہ ان کی غیبت کی مدت طولانی اوربہت زیادہ ہے اورمخلصین ان کے قیام کے انتظارمیں ہیں اورشکاکین ان کا انکاراورمنکرین ان کی یاد کا مذاق اڑانے والے ہیں۔(4)

9۔ ابوبصیر نے روایت کی ہےکہ امام صادق علیہ السلام نےفرمایا: کیا میں تمہیں ایسی چیز سےآگاہ نہ کروں کہ جس کے ہونےسےاللہ تعالیٰ کسی بندے سے کوئی عمل نہیں قبول نہیں کرتا ہے؟یہ گواہی دینا کہ اللہ کےعلاوہ کوئی معبود نہیں ہے اوریہ کہ محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم اس کا بندہ اوررسول ہیں اورہراس چیزکا اقرارکرنا کہ جس کا اللہ نے حکم دیا ہے۔ ہماری ولایت کو قبول کرنا اورہمارے دشمنوں سے بیزاری کا اظہارکرنا، تقویٰ الہی اختیارکرنا اورحضرت قائم عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کا انتطارکرنا ہے۔(5)

مآخذ:

1. سوره اعراف آیه71

2. نورالثقلین، ج2، ص44

3.نهج الفصاحه، کلمه 409

4.کمال الدین و تمام النعمة، ج2، ص378

5.الغیبة، نعمانی، ص۲۰۰

حجۃ الاسلام محسن قرائتی کی کتاب( آیہ ھای مہدوی) سے اقتباس

688899

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

آیت اللہ سید ہاشم حسینی بوشہری:

حضرت فاطمہ زہرا(س) ایران کے اسلامی اور انقلابی معاشرے کیلئے آئیڈیل ہیں

سماجی: ایران کے نامور عالم دین اور خبرگان اسمبلی کے ممبر نے کہا امام زمانہ(عج) حضرت فاطمہ زہرا(س) کو آپنا آئیڈل قرار دیتے ہیں پس حضرت زہرا(س) ہمارے اسلامی اور انقلابی معاشرے کیلئے بھی آئیڈیل ہیں۔

منتخب خبریں