خبرگزاری شبستان

جمعه ۱ شهریور ۱۳۹۸

الجمعة ٢٢ ذو الحجّة ١٤٤٠

Friday, August 23, 2019

وقت :   Wednesday, February 21, 2018 خبر کوڈ : 71610

صدر حسن روحانی سے ہالینڈ کی وزیر خارجہ کی ملاقات
خبررساں ایجنسی شبستان اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی نے ہالینڈ کی وزیر خارجہ محترمہ سیخریڈ کیخ سے ملاقات میں یمن کے نہتے عربوں کے خلاف سعودی عرب کی بربریت اور جارحیت پر سخت تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ عالمی برادری کو یمن کے نہتے عوام پر سعودیہ کی مسلط کردہ جنگ کوختم کرانے کے سلسلے میں اپنا کردار ادا کرنا چاہیے.

صدر حسن روحانی نے ایران اور ہالینڈ کے باہمی تعلقات کو اچھی اور مطلوب سطح پر قراردیتے ہوئے کہا کہ ایران اور ہالینڈ مختلف شعبوں میں باہمی تعاون کو فروغ دے سکتے ہیں اور تجارتی معاملات کوایک ارب یورو کی موجود سطح پر بھی بڑھا سکتے ہیں۔ صدر حسن روحانی نے ایران کے میزائل نظام کے بارے میں بعض ممالک کے پروپیگنڈےکی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران کا میزائل نظام صرف ملکی دفاع کے سلسلے میں ہے اور ایران ملکی دفاع کے سلسلے میں کسی سے کوئی سمجھوتہ اور مذاکرات نہیں کرسکتا کیونکہ دفاع مقدس کے دوران دشمن نے ایران کی شہری آبادی پر وحشیانہ بمباری کی اوراسے میزائلوں سے نشانہ بنایا۔

انھوں نے کہا کہ پوری دنیا نے عراق کے معدوم صدر صدام کی حمایت کی اسے پیشرفتہ ہتھیار فراہم کئے اور ایرانی قوم اس تجربہ کے پیش نظر ملکی دفاع کے سلسلے میں بہت ہی حساس ہے اور اسی وجہ سے ایران کی دفاعی صلاحیت ناقابل مذاکرات ہے۔

اس ملاقات میں ہالینڈ کی وزیر خارجہ نے ملکی دفاع کے لئے ہتھیاروں کی ضرورت کو ایران کا مسلّم حق قراردیتے ہوئے کہا کہ دوسرے ممالک کی طرح ایران کو بھی ملکی دفاع کے لئے روایتی ہتھیار رکھنے کا حق ہے اور ہم ایران کے اس حق کو سرکاری طور پر تسلیم کرتے ہیں۔

ہالینڈ کی وزير خارجہ نے یمن جنگ کو فوری طور پر متوقف کرنے پر زوردیتے ہوئے کہا کہ یمن جنگ حد سے زیادہ طولانی ہوگئی ہے اور اس کا جلد از جلد خاتمہ ہونا چاہیے سعودی عرب کی طرف سے یمن کی شہری آبادی پر بمباری بین الاقوامی قوانین کی صریح خلاف ورزی ہے۔

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز

سماجی: اسلامی جمہوریہ ایران کے شہر بندرعباس میں 8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز ہوچکا ہے جس میں دنیا بھر سے مسلمان دانشور، علماء، مفکرین اور عمائدین شرکت کررہے ہیں۔

منتخب خبریں