خبرگزاری شبستان

چهارشنبه ۳۰ خرداد ۱۳۹۷

الأربعاء ٧ شوّال ١٤٣٩

Wednesday, June 20, 2018

وقت :   Sunday, March 11, 2018 خبر کوڈ : 71796

اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیرخارجہ پاکستان کے دورے پر
خبررساں ایجنسی شبستان اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیرخارجہ محمد جواد ظریف ایک اعلی سطحی اقتصادی اور تجارتی وفد کی قیادت کرتے ہوئے پاکستانی حکام سے بات چیت کیلئے آج اسلام آباد پہنچ رہے ہیں۔ ظریف اپنے اس دورے کے دوران صدر ممنون حسین اور وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سے ملاقاتیں کریں گے جبکہ اسلام آباد اور کراچی میں ایران اور پاکستان کے کاروباری اور تجارتی نمائندوں کے دو اجلاسوں سے بھی خطاب کریں گے۔

ایران کے وزیر خارجہ کے دورہ پاکستان کی اہمیت پر روشنی ڈالتے ہوئے پاکستان کے معروف اور سینیئر تجزیہ کار اور سابق سفیررستم شاہ مہمند کا کہنا ہے کہ ایرانی وزیر خارجہ کا دورہ پاکستان دونوں ممالک کے درمیان اقتصادی روابط کو فروغ دینے کے لئے اہم ثابت ہو گا۔ پاک ایران روابط کی اہمیت کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان حکومتی حکام کی ملاقاتوں اور دوروں سے باہمی تعاون کو فروغ ملے گا۔ خطے میں پاک ایران مشترکہ چیلنجز اور خطرات کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف اس دورے میں پاکستانی اعلی عہدیداروں سے باہمی دلچسپی روابط سمیت خطے اور بین الاقوامی امور کے بارے میں تبادل خیال کریں گے۔

رستم شاہ نے پاک ایران گیس پائپ لائن کے عملدرامد پر زور دیتے ہوئے کہا کہ اس منصوبے سے پاکستانی کے توانائی کمی پر قاپو پایا جاسکے گا۔ انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران اور پاکستان افغانستان میں امریکی فوجی قیام کے خلاف ہیں کیوں کہ امریکہ افغانستان میں ایران، چین اور پاکستان پر نظر رکھنا چاہتا ہے۔

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

ڈاکٹر حسن روحانی:

قطر سے تعلقات کے فروغ میں کوئی رکاوٹ نہیں ہے

سیاسی: اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر نے ایران اور قطر کے تعلقات میں بہتری کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا قطر سے بہتر تعلقات میں کوئی رکاوٹ نہیں ہے کیونکہ قطر ہمارا ہمسایہ ملک ہے اور ہم ہمیشہ قطر کے ساتھ کھڑے ہیں۔

منتخب خبریں