خبرگزاری شبستان

یکشنبه ۶ خرداد ۱۳۹۷

الأحد ١٣ رمضان ١٤٣٩

Sunday, May 27, 2018

وقت :   Tuesday, May 15, 2018 خبر کوڈ : 72291
حجۃ الاسلام سید مصطفی باقری:
انتظار،ذمہ داریوں سےفرارہونےکا نام نہیں ہے
خبررساں ایجنسی شبستان: شیعہ اگرمہدوی حکومت اورامام کےظہورکاعقیدہ رکھتا ہے تو اسےسماجی، سیاسی اورثقافتی میدانوں میں ہمیشہ جدوجہد کرنی چاہیے۔ جو افراد غیبت کے دورمیں اپنی ذمہ داریوں اورفرائض سے بھاگتے ہیں انہوں نے انتظارکےصحیح معنی کو نہیں سمجھا ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان کی رپورٹ کےمطابق مہدویت کے محقق حجۃ الاسلام والمسلمین سید مصطفی باقری نےمستقبل کے بارے میں امید اورمنتظرمعاشرے کی معاشرتی خصوصیات کا جائزہ لیتے ہوئےکہا ہے کہ اگرکسی معاشرے میں امید ختم ہوجائے تو وہ معاشرہ ایک بےروح اوربےاثرمعاشرے میں تبدیل ہوجائےگا۔ بنیادی طورپرانتظاراور مہدویت کےموضوع میں عصرظہور کےمخفی رہنےکی ایک اہم ترین دلیل بھی بہترمستقبل تک پہنچنےکی امید ہے۔ اگرحضرت ولی عصرعجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف اپنی غیبت کی ابتدا میں ہی واضح طورپراعلان کردیتےکہ ان کی غیبت کس وقت تک ہوگی تو یقینا سابقہ امتیں اورمعاشرےعصرظہورکو پانےکی طرف کوئی رغبت نہ رکھتے۔ انسان کو ہردور میں حرکت اورنشاط کی ضرورت ہےاورمعاشرے میں مایوسی اورناامیدی سے پھیلانے سے وہ معاشرہ انحطاط اورتباہی کی طرف چلا جائےگا۔ ہم مکتب تشیع کے پیروکاربہتر اورروشن مستقبل کاعقیدہ رکھتے ہیں۔ ہماری اکثراحادیث بہترین اورمثالی مستقبل کی نوید دیتی ہیں۔ امام صادق علیہ السلام سےمنقول ہےکہ آپ نے فرمایا:«مَنْ سَرَّهُ أَنْ يَكُونَ مِنْ أَصْحَابِ الْقَائِمِ فَلْيَنْتَظِرْ وَ لْيَعْمَلْ بِالْوَرَعِ وَ مَحَاسِنِ الْأَخْلَاقِ وَ هُوَ مُنْتَظِرٌ». ہم خواہ عصرظہور میں ہوں یا اس دورکو نہ پاسکیں ہمیں اپنی ذمہ داریوں پرعمل کرنا چاہیےکیونکہ اگراس طرح ہو تو اگرچہ ہم عصرظہورکو نہ پاسکے لیکن روایات کے مطابق ہم امام زمانہ علیہ السلام کےاصحاب اورساتھیوں میں شمارہوں گے۔

شیعہ اگرحقیقت میں مہدویت کےنئےدوراورظہورکا حقیقی عقیدہ رکھتا ہے تو اسے سیاسی، سماجی اورثقافتی میدان میں ہمیشہ سعی وکوشش کرنی چاہیے۔ ہم جس قدرعصر کے نزدیک ہوں گےاتنا ہی ذمہ داریوں کا احساس پیدا ہوگا۔

امام جعفرصادق علیہ السلام نے اپنےاصحاب سےخطاب کرتے ہوئے فرمایا:«لَمَّا طَالَ‏ عَلَى‏ بَنِی‏ إِسْرَائِیلَ‏ الْعَذَابُ ضَجُّوا وَ بَکَوْا إِلَى اللَّهِ أَرْبَعِینَ صَبَاحاً؛ هَکَذَا أَنْتُمْ لَوْ فَعَلْتُمْ لَفَرَّجَ اللَّهُ عَنَّا، فَأَمَّا إِذَا لَمْ تَکُونُوا فَإِنَّ الْأَمْرَ یَنْتَهِی إِلَى مُنْتَهَاهُ» یعنی نافرمانی کی وجہ سےطے یہ تھا کہ اسرائیل حیران وسرگران رہے لیکن چالیس دن تک گریہ وزاری کرنےکی وجہ سے اللہ تعالیٰ نے انہیں سرگردانی کی کیفیت معاف کردی۔ اگرآپ بھی عصرظہورکی تمنا رکھتے ہو تو اللہ کی بارگاہ میں استغاثہ کرو تو یقینا تمہارے لیےاللہ کی جانب سے فرج اورگشادگی حاصل ہوگی۔

الہی اصول یہ ہےکہ عصرظہورسے قبل بہت زیادہ مشکلات اورمصیبتیں پیش آئیں گی۔ جوان نسل کو معلوم ہونا چاہیے کہ مہدوی کریمہ حکومت میں کچھ جوان اعلیٰ مراتب پرفائزہوں گے۔ پاکیزہ اورآگاہ جوان اگر حضرت ولی عصرعجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کی تحریک میں شامل ہونا چاہتےہیں تو انہیں ہمیشہ تہذیب نفس اورگناہوں سےدوری کے راستے پرگامزن ہونا چاہیے۔ حضرت حجت علیہ السلام کےسپاہیوں کو امربالمعروف ونہی عن المنکرکی عظیم اورقرآنی ثقافت کی ترویج کے لیےاقدام کرنا چاہیے۔

۷۰۵۵۱۴

 

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

خطیب مسجد فتح قاہرہ:

تمام آسمانی کتب ماہ مبارک رمضان میں نازل ہوئیں

سماجی: مصر کے دارالحکومت قاہرہ میں مسجد فتح کے خطیب نے کہا تمام آسمانی کتب ماہ مبارک رمضان میں نازل ہوئی ہیں۔

منتخب خبریں