خبرگزاری شبستان

جمعه ۲۷ مهر ۱۳۹۷

الجمعة ٩ صفر ١٤٤٠

Friday, October 19, 2018

وقت :   Wednesday, May 16, 2018 خبر کوڈ : 72303
آیت اللہ رشاد:
بیت المقدس میں امریکی سفارتخانےکی منتقلی ایک عظیم سانحہ اورتاریخی خیانت ہے
خبررساں ایجنسی شبستان: آیت اللہ رشاد نےکہا ہےکہ بیت المقدس میں امریکی سفارتخانےکا انتقال ایک عظیم سانحہ اورتاریخی خیانت ہےکہ جس کے نتیجےمیں مظلوم فلسطینیوں کا قتل عام ہورہا ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان نے اسلامک تھاٹ اینڈکلچرانسٹی ٹیوٹ کےتعلقات عامہ کے حوالے سےنقل کیا ہےکہ اس انسٹی ٹیوٹ کے سربراہ اوربانی آیت اللہ علی اکبررشاد نے ۱۵مئی کو اپنے درس خارج میں بیت المقدس میں امریکی سفارتخاتےکےانتقال پراپنے ردعمل کا اظہارکرتے ہوئےکہا ہے کہ کل ہم نے دیکھا ہےکہ امریکہ نے فلسطینیوں کےقتل عام کی قیمت پر بیت المقدس میں اپنے فساد کے اڈے کا افتتاح کیا ہے۔ یقینا اگر عرب کے فاسق وفاجراورآلہ کارسربراہوں کی جانب سےامریکیوں کے تسلط اورقبضےکو سہولت فراہم کرنے کےلیےان حالیہ مہینوں کے دوران خطے میں یہ واقعات رونما نہ ہوتےتویہ عظیم سانحہ بھی رونما نہیں ہوسکتا تھا۔

انہوں نےمزید کہا ہےکہ اگرچہ کوئی بھی ملک بیت المقدس میں امریکی سفارتخانےکےانتقال کی حمایت نہیں کرتا ہے اوراس کی مذمت کی گئی ہے اوراکثرمسلمانوں اوربین الاقوامی اداروں نے اس مخالفت کی ہے لیکن عالمی استعماراوربڑی طاقتیں جانتی ہیں یہ ظاہری مخالفتیں ہیں۔ حقیقت میں یہ ایک افسوسناک بات ہےکہ جب کوئی سانحہ رونما ہوتا ہے تو بین الاقوامی آرگنائزیشنزفقط افسوس کا اظہارکرکے چپ ہوجاتی ہیں۔

آیت اللہ رشاد نےکہا ہےکہ بیت المقدس، مسلمانوں سے متعلق ہے اوریہ جو امریکہ نےجان بوجھ کر اوردشمنی کی بنا پراپنے سفارتخانے کو اس سرزمین پرمنتقل کیا ہے یہ اس بات کی علامت ہے کہ  دنیا میں جنگل کا قانون رائج ہے اورتمدن نام کی کوئی چیزموجود نہیں ہے۔

انہوں نے فلسطینیوں کےخلاف صہیونیوں کےحالیہ مظالم پرافسوس کا اظہارکرتے ہوئےکہا ہے کہ میرا خیال یہ ہےکہ رونما ہونے والے واقعات اس وعدہ کا تحقق ہےکہ جو ہمارے عقلمند، دوراندیش، شجاع اوربابصیرت رہبراورقائد نےغاصب اسرائیل کی تباہی کا دیا تھا۔

۷۰۵۷۴۰

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز

سماجی: اسلامی جمہوریہ ایران کے شہر بندرعباس میں 8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز ہوچکا ہے جس میں دنیا بھر سے مسلمان دانشور، علماء، مفکرین اور عمائدین شرکت کررہے ہیں۔

منتخب خبریں