خبرگزاری شبستان

دوشنبه ۲۶ آذر ۱۳۹۷

الاثنين ٩ ربيع الثاني ١٤٤٠

Monday, December 17, 2018

وقت :   Sunday, June 17, 2018 خبر کوڈ : 72574
آیت اللہ عباس علی سلیمانی:
انبیاء اورشہداء کےساتھ رفاقت انسانی سعادت کا سبب بنتی ہے
خبررساں ایجنسی شبستان:زاہدان کےامام جمعہ نےکہا ہےکہ انبیاء، صدیقین اورشہداء کے ساتھ رفاقت انسان کی سعادت باعث بنتی ہے۔

خبررساں ایجنسی شبستان: زاہدان کےامام جمعہ اورنمائندہ ولی فقیہ آیت اللہ عباس علی سلیمانی نے درس تفسیرقرآن کریم میں کہا ہےکہ اللہ کا ذکر دل کو سکون پہنچاتا ہے، نماز اللہ کا ذکر ہے لہذا یقینا اللہ کی یاد دلوں کے سکون اوراطمینان کا باعث ہے۔

انہوں نےمزید کہا ہےکہ جو لوگ اللہ تعالیٰ اوراس کے پیغمبرکےدستورات اوراحکام کی پیروی کرتے ہیں تو اللہ تعالیٰ انہیں ایسےافراد کے زمرے میں قراردیتا ہےکہ جن پراس کی نعمتیں نازل ہوتی ہیں یعنی انہیں سچےاورصالح راہنماوں یعنی انبیاء، شہداء اورصالحین میں سے قراردیتا ہے۔

آیت اللہ سلیمانی نے کہا ہےکہ سورہ حمد میں بیان کیا گیا ہےکہ ہم کن افراد سے دوستی کریں۔ بنابریں سب سے پہلےجن سےدوستی کرنےکا ہمیں حق حاصل ہے وہ انبیاء ہیں کیونکہ انبیاء اورمرسلین ہماری نجات، ہدایت، تہذیب ،سلامتی اورہمارے کمال  کےلیےآئے ہیں لہذا ہم پرذمہ داری عائد ہوتی ہےکہ ہم ان کے ساتھ رہیں۔

انہوں نےمزید کہا ہےکہ دوسرے وہ افراد جن سے رفاقت اوردوستی کرنی چاہیے وہ سچےاورصدیق مبلغین ہیں البتہ ایسےمبلغین کہ جن کا قول وفعل ایک ہی ہو تاکہ وہ  قول اورفعل کے میدان میں بھی انبیاء کے افکارکی ترویج کے مبلغ بن سکیں۔

زاہدان کےامام جمعہ نےکہا ہےکہ تیسرا وہ گروہ کہ جن کی رفافت کا حکم دیا گیا ہے وہ شہداء ہیں۔ جب انبیاء اورصدیقین معاشرے اورماحول کی اصلاح کا آغاز کرتے ہیں تو یہ قدرتی بات ہےکہ آلودہ اورناپاک افراد انبیاء اورصدیقین کی تبلیغ کو ناکام بنانے کےلیےاٹھ کھڑے ہوتے ہیں۔ شیاطین انبیاء اورصدیقین کے پروگراموں کو ناکام بنانے اورحق کےمحاذ کو شکست دینے کے لیےاٹھ کھڑے ہوتے ہیں۔ لہذا اس وقت ایسےمردوں کی ضرورت ہےکہ جو ان ناپاک اورآلودہ افراد کے خاتمے کےلیے اپنی جانوں کے نذرانے پیش کریں اوردین اورنظام کی حفاظت کے لیے کسی قسم کی قربانی سے دریغ نہ کریں اوریہ وہی افراد ہیں کہ جنہیں شہداء اورمجاہدین  کا نام دیا جاتا ہے۔

انہوں نےمزید کہا ہےکہ چوتھا گروہ صالحین کا گروہ ہےکہ جن سے رفاقت کرنی چاہیے کیونکہ صالحین تجربہ کار اورپختہ افراد ہیں کہ جو اپنی ذاتی اورسماجی زندگی میں دینی مسائل کی مراعات کرتے ہیں۔

زاہدان کے نمائندہ ولی فقیہ نے آخرمیں کہا ہےکہ بنابریں انبیاء، صدیقین ،شہداء اورصالحین وہ چارگروہ ہیں کہ جن کے نقش قدم پرچلنا چاہیے کیونکہ انبیاء کا راستہ، صراط مستقیم، صدیقین کا راستہ صراط مستقیم کی تبلیغ، شہداء کا راستہ صراط مستقیم کا دفاع اورصالحین کا راستہ صراط مستقیم پرعمل کرنا اوراس پرکاربند رہنا ہے۔ اس طرح ایک دینی اوراسلامی معاشرہ تشکیل پاتا ہے کہ قرآن کریم فرماتا ہے کہ ایسے افراد کے ساتھ دوستی کریں۔

۷۱۱۱۸۳

 

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز

سماجی: اسلامی جمہوریہ ایران کے شہر بندرعباس میں 8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز ہوچکا ہے جس میں دنیا بھر سے مسلمان دانشور، علماء، مفکرین اور عمائدین شرکت کررہے ہیں۔

منتخب خبریں