خبرگزاری شبستان

دوشنبه ۲۹ مرداد ۱۳۹۷

الاثنين ٩ ذو الحجّة ١٤٣٩

Monday, August 20, 2018

وقت :   Thursday, July 19, 2018 خبر کوڈ : 72805
حجۃ الاسلام مسعود عالی:
امام رضا(ع) نےایران کو تشیع کا مرکز بنا دیا تھا
خبررساں ایجنسی شبستان: ایران کے مشہورخطیب نےکہا ہےکہ امام رضا علیہ السلام نے کیفیت اورکمیت کےلحاظ سے ولایت کو کمال پرپہنچا یا تھا اورشیعہ کی معرفت میں اضافہ کیا تھا۔ ہمارے پاس اہل بیت علیہم السلام کی متعدد روایات موجود ہیں کہ آخرالزمان میں ایرانی امام زمانہ علیہ السلام کے ظہورکی راہ ہموارکریں گے۔

خبررساں ایجنسی شبستان شعبہ کرمان کی رپورٹ کے مطابق ایران کے نامورخطیب حجۃ الاسلام مسعود عالی نے ۱۸ جولائی کو اپنے خطاب کے دوران عشرہ کرامت کی مناسبت سے ہدیہ تبریک پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ائمہ معصومین علیہم السلام کی زندگی میں دو حائزاہمیت نقاط موجود ہیں؛ ایک امام حسین علیہ السلام کے دورمیں کہ جب واقعہ عاشورا پیش آیا تھا کہ جس کی وجہ سے دین محفوظ ہوگیا  تھا اوردوسرا امام رضا علیہ السلام کا دور ہے کہ آپ کی ایران کی طرف نے ایک انقلاب برپا کردیا تھا۔

انہوں نےمزید کہا ہے کہ ایک شخص نےامام سجاد علیہ السلام کو طعنہ دیتے ہوئے پوچھا کہ واقعہ عاشورا میں کون کامیاب ہو ا تھا؟ تو امام علیہ السلام نے فرمایا: صبرکرو اذان کا وقت ہونے دو تاکہ معلوم ہو کہ کون  کامیاب ہوا ہے۔ جب اذان دی گئی تو پیغمبراکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کا نام لیا گیا تو اس کے بعد ضمیربیدارہوگئے۔

حجۃ الاسلام عالی نےکہا ہے کہ امام رضا علیہ السلام نےدوعظیم کام انجام دیےتھے: ایک یہ کہ امام علیہ السلام نے کیفیت اورکمیت کےلحاظ سے ولایت کو کمال کی منزل پرفائزکیا تھا اورشیعوں کی معرفت میں اضافہ کیا تھا کیونکہ امام رضاعلیہ السلام سے پہلے شیعہ عوام ولایت کے بارے میں اتنی زیادہ معرفت نہیں رکھتی تھی ۔ آپ نے ایران میں ایک شیعہ مرکزقائم کیا اورآپ کے ایران میں آنے سے آٹھ ہزارامام زادے ایران کے مختلف علاقوں میں پھیل گئے تھے۔ بالخصوص دو قافلے بہت زیادہ اہمیت کے حامل تھے ایک حضرت فاطمہ معصومہ سلام اللہ علیہا کا قافلہ اوردوسرا احمد بن موسی علیہما السلام کا قافلہ تھا اورتاریخ میں ان میں سے ایک قافلہ ہزاروں افراد پرمشتمل تھا۔

انہوں نے مزید کہا ہے کہ امام رضا علیہ السلام نے ایک اورعظیم کام انجام دیا تھا اورمختلف قسم کے اعتراضات اورشکوک وشبہات کے جوابا ت تھے کہ جوآج کل وہابیوں کےتوسط سے پیش کیے جاتے ہیں۔ آپ مختلف شاگردوں کی تربیت کرکے انہیں مختلف ممالک میں بھیجا کرتے تھےکہ جو مختلف شہروں میں دینی مبلغ اورمرجع کےعنوان سے لوگوں کےدینی مسائل اورمشکلات حل کیا کرتے تھے۔ لہذا  اہل بیت علیہم السلام کے دورسے ہی مراجع تقلید اورائمہ کی وکالت کا سلسلہ جاری ہے اوراس دورسے مختص نہیں ہے۔

ایران کے اس مشہور خطیب نے آخرمیں کہا ہے کہ امام حسین علیہ السلام، امام رضا علیہ السلام اورامام زمانہ علیہ السلام کو کبھی بھی سلام کرنا فراموش نہ کریں اورہمیشہ ان تین ائمہ کو سلام کیا کریں۔

۷۱۶۷۸۵

 

 

 

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

امام محمد باقرعلیہ السلام کی شب شہادت، ایران اسلامی سوگوار و عزادار

خبررساں ایجنسی شبستان فرزند رسول حضرت امام محمد باقرعلیہ السلام کی شب شہادت کی مناسبت سے ایران کے سبھی چھوٹے بڑے شہروں کی مساجد اور امام بارگاہوں اور مقدس مقامات میں مجالس عزا کا انعقاد کیا گیا ہے جہاں علماء و ذاکرین خطاب کر رہے ہیں.

منتخب خبریں