خبرگزاری شبستان

سه شنبه ۲۹ آیان ۱۳۹۷

الثلاثاء ١٢ ربيع الأوّل ١٤٤٠

Tuesday, November 20, 2018

وقت :   Saturday, August 18, 2018 خبر کوڈ : 73137

منتظرین کی سماجی طاقت کو کمزورنہ ہونے دینے کا راستہ
خبررساں ایجنسی شبستان: امام مہدی عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کےظہوراوران کی کریمہ حکومت کو پانےکا خیال رکھنے والے منتظرین کو عصرغیبت میں ایک دوسرے کا حامی اورمددگارہونا چاہیےتاکہ بہت زیادہ مشکلات اوردشمنوں کی وعدہ خلافیوں کے دوران کمزورنہ ہوجائیں اوراپنی سماجی طاقت کو ہاتھ سےنہ جانےدیں۔

خبررساں ایجنسی شبستان کی رپورٹ کےمطابق منتظرانہ طرززندگی فقط منتظرانہ تفکراورعمل کے ذریعےمتحقق ہوتا ہےاوریہ فکراورعمل اس وقت متحقق ہوگا جب ہم چھوٹے چھوٹےمسائل میں اپنے اصولوں کی مراعات کریں گے۔ اس سلسلےکا ایک موضوع ایک دوسرے سے تعاون کرنا ہے۔ کیونکہ اس زندگی میں انسان ایک دوسرے سےبے نیاز نہیں ہیں لہذا یہ تعاون اورایک دوسرے کی مدد ہے کہ جو اسےسماجی زندگی میں کامیاب وکامران کرتی ہے۔

تعاون ایک اہم اخلاقی اصل ہےکہ قرآن کریم میں جس کا حکم دیا گیا ہے اوریہی چیزاس کی اہمیت کو بیان کرتی ہےَ اللہ تعالیٰ سورہ مبارکہ مائدہ کی آیت نمبر2 میں فرماتا ہے:  نیکی اورتقویٰ کی راہ میں ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کرو اورگناہ اورظلم وستم کی راہ میں ایک دوسرے سے تعاون نہ کرو۔

امیرالمومنین علیہ السلام فرماتے ہیں کہ میں نے پیغمبراکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سےسنا کہ آپ نےفرمایا: جو شخص مومن کی ایک مشکل کو برطرف کرے اس کی مثال اس شخص کی سی ہے کہ جس نے اپنی پوری زندگی عبادت میں گزاری ہو۔(1)

امام صادق علیہ السلام سے بھی پیغمبراکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سےنقل کرتے ہوئے فرمایا: لوگ ،اللہ کےاہل واعیال ہیں اوراللہ کے نزدیک پسندیدہ ترین شخص وہ ہےکہ جو اللہ کےاہل وعیال کو نفع پہنچائےاورانہیں خوش کرے۔(2)

بہترین نیکی کےعنوان سےظہوراوراس کی راہ ہموارکرنے کے لیے بھی تعاون کی ضرورت ہے۔ ایسا نہیں ہوسکتا کہ ہرکوئی کہےکہ میں خود امام زمانہ علیہ السلام کی سلامتی اوران کےظہورکے لیےدعا کرتا ہوں اوریہی کافی ہےاورمجھے دوسروں کے امورسے کوئی سروکارنہیں ہے۔ بلکہامام مہدی عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کے ظہوراوران کی کریمہ حکومت کو پانے کا خیال رکھنے والے منتظرین کو عصرغیبت میں ایک دوسرے کا حامی اورمددگارہونا چاہیے تاکہ بہت زیادہ مشکلات اوردشمنوں کی وعدہ خلافیوں کےدوران کمزورنہ ہوجائیں اوراپنی سماجی طاقت کو ہاتھ سے نہ جانے دیں۔ ایک ایمانی اوراسلامی معاشرے کو ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کرنا چاہیے تاکہ وہ امام زمانہ عجل اللہ تعالیٰ فرجہ الشریف کی عنایات کو جلب کرسکے۔(3)

مآخذ :

1- وسائل الشیعہ، ج11، ص578؛

2-وسائل الشیعه، ج11، ص563؛

3-زندگی مهدوی(اخلاق و اوصاف منتظران)، ص86

722338.

 

تبصرے

نام :
ایمیل:(اختیاری)
رائے ٹیکسٹ:
ارسال

تبصرے

سروس کی خبروں کی سرخیاں

8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز

سماجی: اسلامی جمہوریہ ایران کے شہر بندرعباس میں 8ویں بین الاقوامی کانگریس امام سجاد(ع) کا آغاز ہوچکا ہے جس میں دنیا بھر سے مسلمان دانشور، علماء، مفکرین اور عمائدین شرکت کررہے ہیں۔

منتخب خبریں